اسلام آباد ۔ 26 اپریل (اے پی پی) وفاقی وزیر انسانی حقوق سینیٹر کامران مائیکل نے کہا ہے کہ مسیحیوں کیلئے شادی ایکٹ اور طلاق کے حوالے سے ترمیمی بل اسی سال قومی اسمبلی میں پیش کر دیا جائے گا، بل کے مسودہ کو حتمی شکل دینے کے لیے مشاورتی اجلاس جاری ہیں، مسیحی برادری کو شادی ایکٹ 1872اور طلاق ایکٹ1869کی وجہ سے بہت سے مسائل درپیش ہیں ۔ شادی کے قانون کو جدید تقاضوں کے مطابق ڈالنے کے لیے پرانے قانون میں ترمیم انتہائی ضروری ہے،چائلڈ میرج اور غیر قانونی شادیوں پر سزا کی تجویز بھی زیر غور ہے ۔