پشاور۔15مارچ (اے پی پی)وزیراعظم پاکستان عمران خان نے کہاہے کہ قبائلی باشندوں کی زندگیوں میں انقلابی تبدیلی کا وقت آگیا ہے اور خیبر پختونخوا میں ضم ہونے کے بعد اب قبائلی اضلاع میں تمام شعبوں میں تیز تر ترقی ہو گی ۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے ضلع مہمند میں غلنئی کے مقام پر قبائلی عمائدین سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر انھوں نے ضلع مہمند میں صحت انصاف کارڈ کا بھی اجراء کیا ۔ انھوں نے کہا کہ یہ کارڈ قبائلی باشندوں کیلئے نعمت ثابت ہو گا جس کی بنیاد پر ہر خاندان کسی بھی ہسپتال میں سات لاکھ 20ہزار روپے تک کا علاج کرا سکے گا ۔ وزیر اعظم نے کہا کہ قبائلی اضلاع اور یہاں کے باشندے درخشاں روایات کے امین ہیں اور ہم ان روایات کو قدر کی نگاہ سے دیکھتے ہیں ، انھوں نے کہا کہ قبائلی اضلاع میں ترقی کے عمل کے دوران یہاں کی روایات کی پاسداری کی جائے گی اور ان روایات کو مقدم رکھا جائے گا ۔ انھوں نے کہا کہ قبائلی باشندوں نے بے پناہ قربانیاں دی ہیں جن کی پوری قوم قدر کرتی ہے تاہم انکی محرومیوں اور پسماندگی کا دور گزر گیا ہے اوراب یہاں تعلیم ، صحت اور سیاحت سمیت ہر شعبہ ترقی کرے گا ، وزیر اعظم نے کہا کہ ترقی کے عمل اور ترقیاتی فنڈز خرچ کرنے کے معاملے میں تمام فیصلے منصفانہ بنیادوں پرہونگے اوران فیصلوں میں یہاں کے عمائدین کی آراء کو اولیت دی جائے گی ، انھوں نے کہا کہ مہمند ڈیم اس علاقے کا انتہائی اہم منصوبہ ہے جس پر جلد ہی کام شروع ہونے والا ہے ،انھوں نے کہا کہ سیاحت کے شعبے کی ترقی خیبر پختونخوا میں غربت میں کمی کی اہم وجہ بنی ہے اس لئے قبائلی اضلاع میں بھی سیاحت کے فروغ اور سیاحتی مقامات کی ترقی پر خصوصی توجہ دی جائے گی۔