بلوچستان کے مختلف علاقوں میں نوجوانوں کے لیے مثبت اور غیر نصابی سرگرمیوں کا انعقاد

بلوچستان کے مختلف علاقوں میں نوجوانوں کے لیے مثبت اور غیر نصابی سرگرمیوں کا انعقاد

کوئٹہ۔1نومبر (اے پی پی):بلوچستان کے لوگوں بالخصوص نوجوانوں کے لیے مختلف اضلاع میں تفریحی اور غیر نصابی سرگرمیوں کا انعقادکیا گیا۔ان سرگرمیوں میں کھیلوں کے مقابلے ، مباحثے ،نعت خوانی کے مقابلے ،تعلیمی ریلیاں اور سیمینا ر شامل تھے جن میں ہزاروں افراد نے شرکت کی ۔▪

 

ان سرگرمیوں کی وجہ سے بلوچ نوجوان قومی دھارے میں شامل ہو کر پاکستان کی تعمیر و ترقی کیلئے فعال شہری ثابت ہو رہے ہیں۔ضلع حب، سوراب، چاغی، زیارت، پنجگور، بارکھان، موسیٰ خیل، کیچ، خضدار، دکی اور لورالائی میں 36 مختلف کرکٹ میچز کا انعقادکیا گیا ۔

کرکٹ میچز میں مجموعی طور پر 3700 شائقین نے شرکت کی۔رپورٹس کے مطابق ضلع قلات، کیچ، ہرنائی، چاغی، گوادر، سبی، سوراب اور ژوب میں فٹ بال کے میچز کا انعقاد کیا گیا جن میں مجموعی طور پر 10460شائقین شریک رہے۔حب اور کیچ میں سپورٹس گالا منعقد کیے گئے جن میں 1700 سے زائد افراد نے بھرپور شرکت کی۔لسبیلہ اور بولان میں 5 تقریری مقابلے منعقد کیے گئے جن میں 830 سے زائد افراد نے شرکت کی۔نصیر آباد میں فٹسال میچ اور حب میں والی بال میچ کا انعقاد کیا گیا جن میں کھلاڑیوں نے بڑھ چڑھ کر حصہ لیا۔▪️

عالی یومِ خلا کے موقع پر گوادر میں ایک معلوماتی ریلی نکالی گئی جس میں 200 سے زائد شرکا نے حصہ لیا۔ ژوب میں نعت کے مقابلے کا انعقاد ہوا جس میں 200 سے زیادہ افراد نے شرکت کی۔لورالائی اور سوراب میں طلباء کیلئے خصوصی پروگرام ترتیب دیے گئے جن میں تقاریر، نعت اور ملی نغموں کے مقابلے شامل تھے۔ 250 سے زائد افراد نے بھرپور شرکت کی۔

حب میں کلچرل فیسٹیول کا انعقاد کیا گیا جس مین 250 سے زائد افراد شامل ہوئے۔لورالائی میں “کرپشن اور اس کے اثرات” کے موضوع پر ایک سیمینار ہوا جس میں 300 افراد نے شرکت کی۔حب میں فری میڈیکل کیمپ کا بھی انقاد کیا گیا جس میں سینکڑوں افراد کا مفت چیک اپ کیا گیا۔