بین الاقوامی عدالتِ انصاف فلسطین میں اسرائیل کے غیر قانونی قبضے پر بات کرے، چین

بین الاقوامی عدالتِ انصاف فلسطین میں اسرائیل کے غیر قانونی قبضے پر بات کرے، چین

دی ہیگ۔23فروری (اے پی پی):چین نے بین الاقوامی عدالتِ انصاف (آئی سی جے) سے کہا ہے کہ وہ فلسطینی علاقوں پر اسرائیل کے قبضے کے بارے میں اپنی رائے دے جسے اس نے غیر قانونی قرار دیا تھا۔

العربیہ کے مطابق چین کی وزارتِ خارجہ کے قانونی مشیر ما زنمن نے نیدرلینڈز کے دی ہیگ میں عدالت کو بتایا کہ انصاف میں طویل تاخیر ہوئی ہے لیکن اس سے انکار نہیں ہونا چاہیے۔انہوں نے کہا کہ اسرائیل کو مقبوضہ فلسطینی علاقوں پر اپنا قبضہ شروع کیے 57 سال گزر چکے ہیں۔

مقبوضہ علاقوں پر قبضے اور خودمختاری کی غیر قانونی نوعیت بدستور برقرار ہے۔ واضح رہے 2022 میں اقوامِ متحدہ کی جنرل اسمبلی نے اسرائیلی قبضے کے قانونی نتائج پر غیر پابند رائے دینے کی درخواست کی تھی جس کے بعد ڈبلیو ای کی عالمی عدالت بھی کہا جاتا ہے۔ واضح رہے اس ہفتے 50 سے زیادہ ریاستوں کے دلائل سن رہی ہے۔