فارم45 کے حوالے سے میڈیا پر جھوٹا بیانیہ چلایا جا رہا ہے ، الیکشن پر وائٹ پیپر قوم کے سامنے رکھیں گے، مریم اورنگزیب اورعطا تارڑ کی پریس کانفرنس

Maryam Aurangzeb and Atta Tarar.
Maryam Aurangzeb and Atta Tarar.

لاہور۔16فروری (اے پی پی):مسلم لیگ( ن) کے رہنما ئوں مریم اورنگزیب ا ورعطا تارڑ نے کہا ہے کہ فارم45 کے حوالے سے میڈیا پر جھوٹا بیانیہ چلایا جا رہا ہے ، الیکشن 2024 پر وائٹ پیپر قوم کے سامنے رکھیں گے۔خیبر پختونخوامیں پی ٹی آ ئی نے ڈیجیٹل سیل پر سو ارب روپیہ خرچ کیا،جمہوریت کو ڈی ریل نہیں ہونے دیں گے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے یہاں ماڈل ٹائون میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا۔

مریم اورنگزیب نے کہا کہ پی ٹی آ ئی نے جوفارم 45 سوشل میڈیا پر پھیلائے ، وہ غلط تھے،پہلے ان فارمزکو مارکیٹ میں فلو ٹ کیا گیا ،پھر ٹی وی سکرین پر لا یاگیا ،ہم نے اصل فارم 45 دیا جبکہ پی ٹی آ ئی والوں کے پاس ٹی وی اسکرین شاٹ تھا،الیکشن کمیشن کی ویب سائٹس پر جو فارم 45 اپ لوڈ ہوتا ہے، وہی اصلی ہوتا ہے، پی ٹی آ ئی والے کہتے ہیں کہ مسلم لیگ( ن) کے پاس فارم45 جعلی ہیں جبکہ ہمارے پاس اصلی ہیں۔انہوں نے کہا کہ ہم ایک وائٹ پیپر تیارکررہے ہیں اور اسے قوم کے سامنے رکھیں گے، پی ٹی آ ئی والے جعلی اور اصلی فارم 45کا فرانزک کرالیں، 2018ء میں آر ٹی ایس بیٹھا تھا اور ہمارا مینڈیٹ چوری ہوا تھا،

ہارنے پر ہم نے تو شہدا کی یادگاروں کی بے حرمتی نہیں کی۔ وہ جو جرم کرتے ہیں اس کو پورا آرگنائز کرتے ہیں، یہ جرم پر پورا ایک بیانیہ بنانے کی کوشش کرتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ الیکشن 2024ء سب کیلئے اہم تھے، لیکن الیکشن کو متنازعہ بنا کر پی ٹی آ ئی ملک میں انار کی پھیلانا چاہتی ہے۔مریم اورنگزیب نے کہا کہ میڈ یا پر چلائی گئی غیر حتمی نتائج کے حوالے سے مہم جھوٹا پراپیگنڈاہے اور جھوٹے بیانیے کیلئے میڈیا کو استعمال کیا جا رہا ہے، پی ٹی آئی کو ہم سے اعتراض ہے کہ مسلم لیگ ن ایسا کیوں نہیں کررہی، الیکشن رزلٹ آگئے ہیں اور یہ بے نقاب ہوگئے ہیں، ان کے پاس دکھانے کو کچھ نہیں ہے ۔

ایک سوال کے جواب میں مریم اورنگزیب نے پی ٹی آئی اور مولانا فضل الرحمن کے اتحاد سے متعلق کہا کہ مجھےیہ اتحاد ہوتا نظر نہیں آرہا، مولانا کی جماعت سیاسی جماعتوں کی طرح اپنا اعتراض الیکشن کمیشن میں جمع کرارہی ہے۔انہوں نے کہا کہ الیکشن کے نتائج پر اگر کسی کو کوئی اعتراض ہے تو اس کا فورم انٹرنیشنل میڈیا یا امریکا نہیں ہے، اعتراض دائر کرانے کا فورم الیکشن کمیشن اور عدالتیں ہیں۔ عطا تارڑ نے کہا کہ پی ٹی آ ئی نے خیبر پختونخوا میں ڈیجیٹل سیل قائم کیا جس پر اس نے سو ارب روپے خرچ کئے،ہم عالمی میڈیا کو بتانا چاہتے ہیں ،پی ٹی آ ئی کا ڈیجیٹل سیل جعلی خبریں پھیلا رہا ہے

،ڈیجیٹل دہشتگردی کے ذریعے ملک میں جمہوریت کو ڈی ریل کرنے کی کوشش کی جارہی ہے ،مسلم لیگ( ن) نے پہلے بھی جمہوریت کے استحکام کیلئے قربانیاں دی ہیں اور اب بھی جمہوریت کو ڈی ریل کرنے کی کوششوں کوناکام بنائیں گے۔انہوں نے کہا کہ پی ٹی آ ئی نے عجلت میں جعلی فارم 45 تیار کئے،ان فارمز پر دستخط کی بجائے صرف انگوٹھے لگے ہیں، پی ٹی آئی کی جانب سے سینکڑوں کی تعداد میں جعلی فارم 45سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کئے گئے، فارم 45بنتے ہوئے وقت لگتا ہے،

پریذائیڈنگ افسر سکیورٹی میں ریٹرننگ آفس جاتا اور فارم 45جمع کراتا ہے، محض 5یا10فیصد ابتدائی رزلٹ سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کیئے گئے۔ انہوں نے کہا کہ یہ کہاں کا انصاف ہے کہ خیبر پختونخواہ میں پی ٹی آ ئی جیتے تو وہاں پر الیکشن شفاف ہوئے ہیں جبکہ وہ پنجاب میں ہارے تو انتخابات میں دھاندلی ہو ئی، اگر پنجاب میں دھاندلی ہوئی ہو تی تو مسلم لیگ( ن) کے سینئر رہنما رانا ثناء اللہ ، خواجہ سعد رفیق اور عابد شیر علی نہ ہارتے ، پی ٹی آ ئی نے ڈیجیٹل دہشتگردی کی اور اب بیرونی طاقتوں کو آواز دے ر ہی ہے، اب کہہ رہے ہیں کہ امریکا میری مدد کرے ۔ انہوں نے کہا کہ بیرسٹر گوہر نے کہا کہ ہم حکومت بنانے جارہے ہیں

ہمارے نمبر پورے ہوچکے ہیں، اگلے دن کہا ہم ہار رہے ہیں، اس پوزیشن میں نہیں کہ ہم حکومت بنائیں، آپ پہلے فتح کا اعلان کرتے ہیں، پھر شکست کا اعلان بھی خود ہی کردیتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ہمارے پاس ایسی معلومات بھی ہیں جہاں پولنگ سٹیشن پر میڈیا کے لوگ نہیں تھے، میں نے تب رزلٹ بھیجے جب تصدیق شدہ فارم 45آنا شروع ہوئے، میں سلمان اکرم راجہ کی طرح پہلی بار اس فیلڈ میں نہیں آیا،

میرے پولنگ ایجنٹ نے صبح سے لیکر رات تک پولنگ سٹیشن پرڈیوٹی دی، میں نے میڈیا گروپ میں فارم 45شیئر کیے۔عطاتارڑ نے کہا کہ پی ٹی آ ئی والے متضاد اور جھوٹے فارم 45بنارہے تھے کیونکہ وہ ہار چکے تھے، انہوں نے جعلی فارم 45پر اپنی فتح کا جشن منانا شروع کردیا، اگر ن لیگ نے دھاندلی کرنی ہوتی تو تمام حلقوں میں کرتی۔