ملائیشیا نے فلسطین حامی مواد ہٹانے پرٹک ٹاک اور میٹا کو خبردار کر دیا

ملائیشیا نے فلسطین حامی مواد ہٹانے پرٹک ٹاک اور میٹا کو خبردار کر دیا

کوالالمپور۔28اکتوبر (اے پی پی):ملائیشیا میں شعبہ مواصلات کے نگراں اداے نے سوشل میڈیا کمپنیوں کو فلسطین کے حوالے سے مبینہ طور پرفلسطینی مواد بلاک کرنے کے بعد وارننگ دینے کا فیصلہ کیا ہے۔

عرب نیوز کے مطابق ملائشیا کے وزیر مواصلات فہمی فاضل نے ایکس (ٹویٹر) پر پیغام میں کہا کہ اگر اس مسئلے کو نظر انداز کیا گیا تو اس حوالے سے سخت اقدامات کرنے سے گریز نہیں کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ متعدد پارٹیوں نے حکومت پر زور دیا ہے کہ سوشل میڈیا سے فلسطین کے حوالے سے مواد ہٹانے کے خلاف کارروائی کی جائے۔

انہوں نے کہا ملائشیا کے لوگوں کو فلسطین کے حوالے سے آزادی اظہار رائے کا حق حاصل ہے اور ان سے یہ حق کوئی نہیں چھین سکتا۔

ملائشیا کے وزیر نے بیان میں مزید کہا کہ ٹک ٹاک نے ملائیشیا کے قوانین پر مکمل طور پر عمل نہیں کیا اور گمراہ کن مواد کو روکنے کے لیے اقدامات نہیں کیے۔ دوسری جانب ٹک ٹاک نے کہا ہےکہ پلیٹ فارم پر مواد ہٹانے کے حوالے سے پیش آنے والے مسائل کو حل کیا جائے گا۔