نومبر میں 4060 افراد کو ریسکیو کیا گیا،ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر رحیم یارخان

لانجو نہر سے نامعلوم شخص کی نعش برآمد

رحیم یارخان 02 دسمبر (اے پی پی):ریسکیو1122رحیم یارخان نے نومبر میں4060افراد کو ریسکیو کیا۔رحیم یارخان ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر ڈاکٹرعادل الرحمٰن کے مطابق گذشتہ ماہ ریسکیو1122کو15548کالیں موصول ہوئیں ۔

جن میں سے4175کالیں ایمرجنسی کی1440انفارمیشن کی تھیں،9916 غیرمتعلقہ اور17غلط کالیں کی گئیں ریسکیو1122نے896روڈ ٹریفک ایکسیڈنٹ،44فائر،52لڑائی جھگڑے،2873میڈیکل اور310دوسرے مشترق حادثات پرریسپانس کیا ،ان حادثات میں ریسکیو 1122نے4060مریضوں کوریسکیوکیا۔ جن میں1297افرادکوموقع پر ابتدائی طبی امدادکی فراہمی،2618افرادکو قریبی ہسپتالوں میں منتقل کیا اور145افراد کی موقع پر موت واقع ہوئی۔139ایمرجنسیز روزانہ کی اوسط رہی۔

ڈاکٹر عادل الرحمٰن کے مطابق ضلع میں896ایکسیڈنٹ ہوئے جن میں967افراد زخمی ہوئے زخمی افراد میں مردوں کی تعداد767اور عورتوں کی تعداد200تھی۔ایکسیڈنٹس میں14افراد کی موقع پر موت واقع ہوئی۔ان حادثات میں160پیدل،519مسافر،288 ڈرائیوراور21کم عمرڈرائیورمتاثر ہوئے۔239ایکسیڈنٹ تیز رفتاری،464بے احتیاطی ،9غلط موڑ کاٹنے،2یوٹرن اور182دوسری وجوہات کے باعث پیش آئے۔

جن گاڑیوں کاایکسیڈنٹ ہوا ان میں840موٹر سائیکلیں،101کاریں،9ٹرک،122رکشے ،6بسیں،12وین،13ٹریکٹر ٹرالی اور164دوسری گاڑیاں شامل تھیں۔زخموں کے لحاظ سے25ہیڈ انجری،1سپائنل انجری،18سنگل فریکچر،62متعددفریکچر،861افرادکوخراشیں اورمعمولی چوٹیں آئیں۔جبکہ پیشنٹ ٹرانسفر سروس کے ذریعے ایک ہسپتال سے دوسرے ہسپتال 550مریضوں کو منتقل کیا گیا۔

تحصیل رحیم یارخان میں 15،صادق آبادمیں 279،خان پور میں 185،لیاقت پور میں71اور ان میں سے 21مریضوں کو ضلع سے باہردوسرے اضلا ع کے بڑے ہسپتالوں میں منتقل کیاگیا۔