نیوٹیک صنعتی شعبے کی ہنر مند افرادی قوت کی ضروریات پورا کرنے کیلئے چیمبر میں اپنا سہولت ڈیسک کھولنے کیلئے تیار ہے، چیئرپرسن نیوٹیک

ایسوسی ایٹیڈ پریس آف پاکستان

اسلام آباد۔12فروری (اے پی پی):نیشنل ووکیشنل اینڈ ٹیکنیکل ٹریننگ کمیشن کی چیئرپرسن گلمینہ بلال نے اپنی ٹیم کے ہمراہ اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کا دورہ کیا اور مقامی صنعت کے لئے ہنر مند افرادی قوت تیار کرنے کے لئے چیمبر کے ساتھ تعاون پر تبادلہ خیال کیا۔

انہوں نے قائم مقام صدر آئی سی سی آئی کی تجویز سے اتفاق کرتے ہوئے کہا کہ ایک ایڈوائزری کونسل تشکیل دینے کیلئے سنجیدگی سے غور کیا جائے گا جس میں تمام اہم سٹیک ہولڈرز کو نمائندگی دی جائے اور کہا کہ چیمبر کے ساتھ مزید بات چیت کے ذریعے اس کا طریقہ کار طے کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ نیوٹیک صنعتی شعبے کی ہنر مند افرادی قوت کی ضروریات کو پورا کرنے کیلئے چیمبر میں اپنا سہولت ڈیسک کھولنے کے لئے تیار ہے۔

انہوں نے اس خواہش کا اظہار کیا کہ آئی سی سی آئی 20 سے 23 تربیت یافتہ افراد کی بطور انٹرن انڈسٹری میں تعیناتی میں تعاون کرے۔ اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے قائم مقام صدر انجینئر اظہر الاسلام ظفر نے کہا کہ صنعتوں کی بہتری کے لئے نیوٹیک کا کردار اہم ہے۔

انہوں نے کہا کہ نیوٹیک مختلف صنعتوں کی ہنر مند افرادی قوت کی ضروریات کو پورا کرنے کے لئے ایک ایڈوائزری بورڈ تشکیل دے جس میں تمام بڑی صنعتوں کو نمائندگی دی جائے۔ انہوں نے کہا کہ تمام سٹیک ہولڈرز کی مشاورت سے تمام ٹریننگ پروگرام ترتیب دیئے جائیں جس کے بہتر نتائج برآمد ہوں گے۔ انہوں نے یقین دلایا کہ چیمبر صنعتی شعبے کی ضرورت کے مطابق ہنرمند افرادی قوت تیار کرنے کے لئے نیوٹیک اور مقامی صنعتی شعبے کے درمیان ایک پل کا کردار ادا کرنے کو تیا ر ہے۔

دونوں اداروں نے مقامی صنعت کی بہتری کے لئے تعاون کے ممکنہ شعبوں پر بھی تبادلہ خیال کیا۔ظفر بختاوری، سابق صدر آئی سی سی آئی اور سیکرٹری جنرل یو بی جی پاکستان نے خواتین کو معاشی طور پر بااختیار بنانے کے لیے فارماسیوٹیکل سمیت مختلف صنعتوں کے لئے ہنر مند خواتین تیار کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔

سابق صدر آئی سی سی آئی میاں اکرم فرید نے کہا کہ چیمبر پہلے بھی نیوٹیک کے ساتھ مختلف منصوبوں پر کام کر چکا ہے اور وہ ہنر مند افرادی قوت تیار کرنے کے لئے اس کے ساتھ مزید تعاون کرنے کیلئے تیار ہے۔چوہدری محمد علی، ہمایوں کبیر، محسن خالد، میاں وقاص مسعود اور دیگر نے بھی اس موقع پر اپنے خیالات کا اظہار کیا اور کاروباری اداروں کی ضروریات کے مطابق ہنر مندافرادی قوت تیار کرنے کے لئے مفید تجاویز دیں۔