پی آئی اے نے 26 ملین ڈالر کی ادائیگی کر کے ملائیشین کمپنی سے جہاز واپس لے لئے ہیں ،ایئر مارشل (ر) فرحت حسین

P i a

اسلام آباد۔27فروری (اے پی پی):نگران وزیراعظم کے مشیر برائے ہوا بازی ایئر مارشل (ر) فرحت حسین نے کہاہے کہ ملائیشیا کی کمپنی سے 2015 میں لیزپر لئے جانے والے دونوں جہاز پی آئی اے نے 26 ملین ڈالر کی ادائیگی کر کے واپس لے لئے ہیں ۔

منگل کو ایوان بالا کے اجلاس میں سینٹر کامران مرتضی، سینٹر سیف اللہ ابڑو،سینیٹر رخسانہ زبیر اور دیگر ارکان کے سوالات کے جواب میں نگران وزیراعظم کے مشیر برائے ہوا بازی ایئر مارشل (ر) فرحت حسین نے ایوان کو بتایا کہ پی آئی اے نے 2015ء میں ملائیشیا کی کمپنی سے چھ سال کے لیے لیز پر دو مسافر طیارے حاصل کیے تھے اور ستمبر 2021 میں کنٹریکٹ کی مدت ختم ہونے کے بعد یہ طیارے جکارتہ واپس بھجوائے گئے۔

انہوں نے کہا کہ چھ ملین ڈالر کی ہم نے ادائیگی کرنی تھی جو مالی مشکلات کی وجہ سے بروقت نہیں کی جا سکی تھی۔کووڈ کی وباء کی وجہ سے یہ معاملہ تاخیر کا شکار رہا ۔بعد میں ان جہازوں کی واپسی کے لیے ملائیشیا کی کمپنی نے 51ملین ڈالر کی ادائیگی کا مطالبہ کیا لیکن ہم نے مذاکرات کر کے26 ملین ڈالر کی ادائیگی کرکے یہ دونوں طیارے واپس لےلیے ہیں اور اب منافع کما رہے ہیں۔