اسلام آباد ۔ 27 جون (اے پی پی) وزیراعظم عمران خان نے عوام پر زور دیا ہے کہ اثاثہ جات ظاہر کرنے کی سکیم سے فائدہ اٹھائیں، آخری وقت میں اثاثے ظاہر کرنے والوں کی تعداد بڑھ رہی ہے جس کے پیش نظر ڈیڈ لائن سے متعلق معاشی ٹیم کی مشاورت سے 48 گھنٹوں میں آئندہ کا لائحہ عمل قوم کے سامنے لایا جائے گا، عوام کو ضمانت دیتا ہوں کہ فائلر بننے کے بعد کوئی حکومتی ادارہ تنگ نہیں کرے گا، ایف بی آر میں اصلاحات کے ساتھ ای گورننس بھی ہماری ترجیح ہے، ہمیں مل کر ملک کو قرضوں کی دلدل سے نکالنا ہے، اگر عوام ٹیکس نہیں دیں گے تو ملک قرضوں سے کیسے نجات حاصل کرے گا۔ جمعرات کی رات پی ٹی وی نیوز پر وزیراعظم کی اثاثہ جات ظاہر کرنے کی سکیم کے حوالے سے خصوصی نشریات ”آپ کا پیسہ آپ کے کام“ میں گفتگو کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ یہ ہماری پہلی نسل ہے جو آزاد ملک میں پیدا ہوئی، اس سے قبل ہمارے اباﺅ اجداد انگریزوں کے غلام تھے جس طرح انگریزوں نے ایک غلام قوم کے پیسے سے محلات بنائے، بدقسمتی سے پاکستان کے حکمرانوں نے عوام کو یہ نہیں بتایا کہ ان کی حکومت ہے بلکہ انگریزوں کی طرز پر قومی پیسے پر طرز زندگی اختیار کیا اور آج 70 سال گزرنے کے بعد ہم دنیا کے کم ترین جی ڈی پی گروتھ والے ملک ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ترقی یافتہ ملکوں میں عوام کا پیسہ عوام پر ہی خرچ ہوتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ عوام یہ سمجھتے ہیں کہ ہمارے ٹیکس کا پیسہ ضائع ہو جاتا ہے، لوگوں کو یہ احساس دلانا ہے کہ ان کا پیسہ ان ہی پر خرچ ہو گا اور اس کی میں ضمانت دیتا ہوں۔