اسلام آباد ۔ 14 جولائی (اے پی پی) پاکستان اوربھارت کے درمیان سکھ یاتریوں کیلئے کرتارپورراہداری پر مذاکرات کادوسرا دوراتوار کو منعقد ہوا جس میں دونوں ممالک نے مختلف ایشوز پرتقریباً 80 فیصد اتفاق کیا ہے۔واہگہ میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ترجمان دفترخارجہ ڈاکٹرمحمد فیصل ، جووزارت خارجہ میں جنوبی ایشیاءکیلئے ڈائریکٹرجنرل بھی ہے ، نے بتایا کہ مذکرات کےدوسرے دور میں دونوں ممالک نے تقریباً 80 فیصد معاملات پراتفاق کیاہے اورباقی ماندہ ایشوز پر اتفاق رائے کیلئے مزاکرات کا ایک اوردوردرکارہوگا۔مزاکرات میں پاکستانی وفد کی قیادت ڈاکٹرمحمد فیصل جبکہ 8 رکنی بھارتی وفد کی قیادت بھارتی وزارت داخلہ کے جائنٹ سیکرٹری ایس سی ایل داس نے کی ، مذاکرات کا پہلا دور14 مارچ کو اٹاری میں منعقد ہوا ، دوسرے راونڈ کیلئے ]پہلے 2 اپریل کی تاریخ مقرر کی گئی تھی تاہم بھارت مزاکرات سے نکل گیا تھا ۔انہوں نے کہاکہ کرتارپورراہداری کوکھولنے کا بنیادی مقصد امن کو فروغ دینا ہے، پاکستان خطے میں امن میں پرعزم ہے۔