لاہور۔24 اگست(اے پی پی )وزیر اعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات و نشریات ڈاکٹر فردوش عاشق اعوان نے کہا ہے کہ اگر بھارت نے جنگ شروع کی تو پاکستان اس کو ختم کریگا لیکن پاکستان پہل کرکے بین الاقوامی قوانین کی خلاف ورزی نہیں کریگا تاہم اگر پاکستان پر جنگ تھوپی گئی تو بچہ بچہ افواج پاکستان کے ساتھ شانہ بشانہ ہو کر اس جنگ کو دہلی میں ختم کریگا‘ وزیر اعظم عمران خان نے سفارتی محاذ پر بین الاقوامی قیادت کو کشمیر کے اصل مسئلے سے روشناس کیا ہے‘ انہوںنے کشمیر کاز کو سپورٹ کرنے کیلئے فوکل گروپ تشکیل دیا ہے جو اپنی ترجیحات طے کرکے کشمیر کاز کو آگے بڑھا رہا ہے، وزیر اعظم عمران خان عالمی برادری‘ بین الاقوامی تنظیموں‘ عالمی مبصرین کو مقبوضہ وادی میں ہندوستان کے مائنڈ سیٹ کی طرف متوجہ کر رہے ہیں‘ عمران خان نے بھارت کے ساتھ مذاکرات کے حوالے ایک خودار قوم کے لیڈر کے طور پر اپنا اور قوم کا بیانیہ پیش کیا ہے، پاکستان چاہتا ہے کہ بھارت کشمیر میں انسانیت کا قتل عام بند کرے اور مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے اقوام متحدہ کی قراردادوں پر عمل کیا جائے، پوری پاکستانی قوم ہندوستان کی ریاستی دہشت گردی کا شکار مظلوم کشمیریوں کے ساتھ یکجہتی کا اظہار کر رہی ہے ، پاکستانی صحافیوں اور صحافتی تنظیموں کا مقبوضہ وادی کے صحافیوں سے لائن آف کنٹرول پر پہنچ کر اظہار یکجہتی کرنا لائق تحسین ہے‘ کرتار پور راہداری سکھوں کا بنیادی حق ہے جس کا نومبر میں طے شدہ شیڈول کے مطابق افتتاح کیا جائیگا، حکومت پاکستان میں ریفارمز ایجنڈے کے تحت تبدیلی لا رہی ہے ، حکومت نے معاشی خود مختاری کی طرف قدم بڑھا دیئے ہیں ۔ وہ ہفتہ کو گورنر ہاﺅس لاہور میں گورنر پنجاب چوہدری محمد سرور کے ہمراہ مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کر رہی تھیں۔