اسلام آباد ۔ 11 ستمبر (اے پی پی) حضرت امام حسین اور ان کے رفقاء کی دی جانے والی عظیم قربانی کی یاد میں 10محرم الحرام کو ملک بھر میں نیاز تقسیم کی گئیاور پانی کی سبیلیں بھی لگائی گئیں۔ زندگی کے مختلف طبقات سے تعلق رکھنے والے شہریوں نے کہا ہے کہ یوم عاشور کے موقع پر نیاز کی تقسیم صدیوں پرانی روایت ہے جس کے مطابق بریانی، حلیم، چاول اور کھیر سمیت دودھ اور شربت کی سبیلیں لگائی جاتی ہیں۔ جڑواں شہروں اسلام آباد اور راولپنڈی کے شہریوں نے کہا ہے کہ 10محرم الحرام کے دن نیاز تقسیم کرنے کے حوالے سے خصوصی ڈشز تیار کی جاتی ہیں۔ اس حوالے سے اسلام آباد کے ایک شہری جاوید اختر نے کہا کہ محرم الحرام کے 10دنوں کے دوران ہم ہر روز حلیم تیار کرتے ہیں لیکن 10محرم الحرام کو زیادہ مقدار میں حلیم تیار کرنی پڑتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ زیادہ تر افراد نیاز کی تیاری کے حوالے سے کیٹرنگ کمپنیوں سے رابطہ کرتے ہیں تا کہ تیارشدہ نیاز بآسانی تقسیم کی جا سکے۔ کیٹرنگ کمپنی میں کام کرنے والے ایک کارکن نے کہا کہ ہم سارا سال کھیر تیار کرتے ہیں لیکن محرم کے دوران کھیر کی طلب میں نمایاں اضافہ ہو جاتا ہے اور شہری عاشورہ محرم کے دوران اپنے رشتہ داروں، ہمسایوں اور غرباء میں خصوصی کھانے تقسیم کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہماری کمپنی کو محرم کے 10دنوں کے دوران بہت زیادہ آرڈر موصول ہوتے ہیں جن کی تکمیل کے لئے اضافی عملہ اور وقت درکار ہوتا ہے۔ ا