نیویارک ۔ 12 فروری (اے پی پی) اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوئیترس نے کہا ہے کہ دنیا بھر بالخصوص مشرق وسطیٰ میں بڑھتی ہوئی کشیدگی اور عدم استحکام کے پیش نظر اسرائیل اور فلسطین کے درمیان عشروں پرانا تنازعہ حل کرنے کی ضرورت ہے ۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے چند ہفتہ قبل خطہ کے لئے متنازعہ امن منصوبہ کے اعلان کے بعد یہاں سلامتی کونسل کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے سیکرٹری جنرل نے کہاکہ عالمی ادارہ تنازعہ کے دو ریاستی حل کی حمایت جاری رکھے گا۔ انہوں نے کہا کہ اس وقت مذاکرات اور مفاہمت کی ضرورت ہے۔ انہوں نے فریقین پر زور دیا کہ وہ امن کے نصب العین کے لئے پیش رفت کریں جس کی عالمی برادری حمایت کرے گی،اس موقع پر فلسطینی صدر محمود عباس بھی موجود تھے۔ اسلامی کانفرنس کی تنظیم ، عرب ممالک،فلسطینی حکومت اور افریقی یونین نے پہلے ہی صدر ٹرمپ کے متنازعہ امن منصوبہ کو مسترد کردیا ہے۔ فلسطینی صدر محمود عباس کا کہنا ہے کہ امریکی منصوبہ سے خطہ میں امن یا استحکام نہیں آسکتا کیونکہ اس میں فلسطینیوں کو حق خود ارادیت سے محروم رکھا گیا ہے ۔