لاہور۔17مارچ(اے پی پی ) پاکستان کرکٹ بورڈ نے فوری طور پر ایچ بی ایل پاکستان سپر لیگ کو ملتوی کرنے کا یہ فیصلہ چند روز قبل پاکستان چھوڑ کر جانے والے ایک کھلاڑی میں کوروناوائرس کی علامات ظاہر ہونے کے بعد کیا گیا ہے، مذکورہ کھلاڑی کی اسکریننگ جلد مکمل کرلی جائے گی،پی سی بی نے ایک ذمہ داراداراے کی حیثیت سے چاروں سیمی فائنلسٹ ٹیموں کے اسکواڈز میں شامل تمام کھلاڑیوں، اسپورٹ اسٹاف، میچ آفیشلز، فرنچائز مالکان اور پروڈکشن کریو کے ٹیسٹ کے لیے انتظامات کررکھے ہیں، ان تمام افراد کو ٹیسٹ کی رپورٹ موصول ہونے تک سفر سے گریز کرنے کا مشورہ دیا گیاہے۔ اس امر کا اظہارچیف ایگزیکٹو پی سی بی وسیم خان نے اپنے ایک بیان میں کیا۔ وسیم خان نے کہا کہ پی ایس ایل ملتوی کرنے کا فیصلہ ایک غیرملکی کھلاڑی میں کورونا وائرس کی علامات ظاہر ہونے کے بعد کیا گیا ہے، مذکورہ کھلاڑی کا ٹیسٹ ان کے ملک میں ہوگا۔ انہوںنے کہاکہ پی سی بی لیگ میں شامل تمام افراد کے فوری ٹیسٹ کروانے کےلئے سہولیات فراہم کرے گا۔انہوں نے کہا کہ مذکوہ صورتحال ہر گزرتے دن کے ساتھ بدل رہی ہے جسکا پی سی بی بغور جائزہ لے رہا ہے۔ وسیم خان نے کہاکہ پی سی بی اس ضمن میں تمام متعلقہ اداروں سے رابطے میں ہے۔انہوں نے واضح کیاکہ پی سی بی میچ اور نان میچ ڈیز پر احتیاطی تدابیر اختیار کرتے ہوئے تھرمل گن سے کھلاڑیوں، آفیشلزاور میڈیا نمائندگان کا بخار باقاعدگی سے چیک کرتا رہا ہے۔چیف ایگزیکٹو نے کہا کہ ایونٹ کو ملتوی کرنے کا یہ بہترین وقت ہے اور اس سے قبل تمام ٹیموں کے مالکان کی مشاورت سے مختلف فیصلے کئے گئے جس میں ان ڈورمیچز کروانا ، کھلاڑیوں کو دستبرداری کی آپشن دینا، ایونٹ کی تاریخوں میں تبدیلی اور ٹورنامنٹ کے ایام کم کرنا شامل تھا۔وسیم خان نے کہا کہ پی سی بی کرونا وائرس سے آگاہی اور نمٹنے میں حکومتی مہم کا حصہ بن کر اپنا کردار ادا کرتا رہے گا۔انہوں نے کہاکہ پی سی بی پرامید ہے کہ روزمرہ کی زندگی میں جلد ہر چیز معمول پر آجائے گی اور ہم مداحوں کےلئے کرکٹ واپس لائیں گے۔انہوں نے کہا کہ پی سی بی نے اپنے تمام ڈومیسٹک مقابلے اور کرکٹ سرگرمیاں معطل کردی ہیں۔