تمباکو کمپنیاں بچوں کو راغب کرنے کے لیے خطرناک ہتھکنڈے استعمال کر رہی ہیں، عالمی ادارہ صحت

لندن ۔ 30مئی (اے پی پی) عالمی ادارہ صحت نے خبردار کیا ہے کہ تمباکو کمپنیاں بچوں کو تمباکو نوشی کی طرف راغب کرنے کے لیے ‘خطرناک اور جان لیوا’ ہتھکنڈے استعمال کر رہی ہیں۔ ڈبلیو ایچ او کے مطابق یہ حیرانی کی بات نہیں کہ سگریٹ نوشی شروع کرنے والے زیادہ تر افراد کی عمر اٹھارہ برس سے بھی کم ہوتی ہے۔ اس ادارے نے مزید بتایا کہ تیرہ سے پندرہ برس تک کی عمر کے درمیان چوالیس ملین بچے اس وقت سگریٹ نوشی کے عادی ہیں۔ اس بارے میں عالمی ادارہ صحت نے اپنی ایک رپورٹ اتوار 31 کو منائے جانے والے ‘ورلڈ نو ٹوبیکو ڈے’ کے سلسلے میں جاری کی ہے۔