گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں392 نئے کوویڈ 19 کیسز رپورٹ ہوئے ہیں

اسلام آباد۔22نومبر (اے پی پی):نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سنٹر (این سی او سی) نے کہا ہے کہ گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں392 نئے کوویڈ 19 کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔اتوار کو این سی او سی کے ایک عہدیدار کے مطابق گزشتہ روزہفتہ کو 458کیسز رپورٹ ہوئے جبکہ گذشتہ اتوار کو 461 کیس رپورٹ ہوئے جو گذشتہ ایک ماہ کے دوران ایک دن میں سب سے زیادہ کیس رپورٹ ہوئے۔انہوں نے بتایا کہ وفاقی دارالحکومت سے اب تک 26ہزار569کیسز رپورٹ ہوئے ہیں جبکہ اسلام آبادسے 278 اموات کی اطلاع ملی ہے. اسی 21ہزار712مریض مکمل طور پر صحت یاب ہوئے ہیں۔دریں اثنا وزارت قومی صحت کی ہدایت پر اسلام آباد کی ضلعی انتظامیہ نے دارالحکومت کی مختلف گلیوں میں اسمارٹ لاک ڈاؤن کو جاری رکھنے کے لئے منتخب گلیوں اور دیگر شعبوں میں انفیکشن کی منتقلی کو کم کیا۔انھوں نے معائنہ کرنے والی ٹیموں کے ذریعہ شادی ہالوں ، بازاروں اور پیٹرول پمپوں کا دورہ کرتے ہوئے کورونا سے متعلق ایس او پیزکی خلاف ورزی پر بھی کارروائی کرنا شروع کردی۔ انتظامیہ نے ایس او پیز کی خلاف ورزی پر اسکولوں ، دکانوں ، ورکشاپوں اور ریستورانوں کو بھی سیل کردیا ہے. چیکنگ کرنے والی ٹیموں نے شادی ہالوں کو نوٹسز جاری کرنے کے علاوہ مختلف دکانوں کے مالکان کوجرمانہ کیا۔اس صورتحال پر تبصرہ کرتے ہوئےوزارت قومی صحت کےایک عہدیدار نے بتایا کہ کورونا بیماری پر قابو پانے کے لئے متعدد مقامی سطح پر انتظامی فیصلے کیے گئے ہیں۔انہوں نے شہریوں کو شہر میں کوویڈ19 کے مقامی ٹرانسمیشن کو روکنے کے لئے سماجی فاصلہ برقرار رکھنے ، ماسک کا استعمال اور دیگر احتیاطی تدابیر پر عمل پیرا ہونے کا مشورہ دیا۔انہوں نے کہا کہ حکومت نے کوویڈ 19 سے نمٹنے کے لئے موثر حکمت عملی اپنائی ہے جس کے نتیجے میں ملک میں کورونا کیسوں میں کمی واقع ہوئی ہے۔انہوں نے کہا کہ عالمی معلومات کو مدنظر رکھتے ہوئے کورونا پر قابو پانے کی حکمت عملی بنائی گئی ، جس میں سائنسی انداز میں مقامی ڈیٹا کے انضمام کے اعداد و شمار پر فوکس کیا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ وزارت نے اسلام آباد کے اسکولوں کی انتظامیہ سے بھی ایس او پیز پر کڑی نگرانی کرنے کو کہا ہے تاکہ کوویڈ 19 سے طلبہ کی تحفظ کو یقینی بنایا جاسکے۔