افغانستان میں فوجی آپریشن کے لیے پاکستان کی فضائی حدود استعمال کرنے کی اجازت سے متعلق امریکہ کے ساتھ کوئی معاہدہ نہیں، دفتر خارجہ نے امریکی میڈیا رپورٹ کو مسترد کر دیا

اسلام آباد۔23اکتوبر (اے پی پی):پاکستان نے ہفتہ کو امریکی میڈیا کی اس رپورٹ کہ افغانستان میں فوجی اور انٹیلی جنس آپریشن کے لیے فضائی حدود کے استعمال کی اجازت دینے کے لیے امریکہ کے ساتھ کسی بھی قسم کی کوئی مفاہمت ہے کی سختی سے تردید کی ہے۔

سی این این کی تین ذرائع کے حوالے سے جمعہ کو شائع ایک رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا تھاکہ جوبائیڈن انتظامیہ نے مقننہ سے کہا ہے کہ وہ افغانستان میں فوجی اور انٹیلی جنس آپریشن کرنے کے لیے فضائی حدود کے استعمال کے لیے پاکستان کے ساتھ باضابطہ معاہدہ کرنے کے قریب ہیں۔

تاہم امریکی میڈیا کے دعوے کا جواب دیتے ہوئے دفتر خارجہ کے ترجمان نے کہا کہ ایسی کوئی مفاہمت موجود نہیں ہے۔

امریکہ کی جانب سے افغانستان میں فوجی اور انٹیلی جنس آپریشن کرنے کے لیے پاکستان کی فضائی حدود کے استعمال کے لیے معاہدے کو باقاعدہ شکل دینے کے حوالے سے تازہ ترین خبروں کے حوالے سے میڈیا کے سوالات کے جواب میں ترجمان نے ایک بیان میں کہا کہ ایسا کوئی معاہدہ موجود نہیں ہے۔

ترجمان نے کہا کہ پاکستان اور امریکہ کا علاقائی سلامتی اور انسداد دہشت گردی پر دیرینہ تعاون ہے اور دونوں فریق باقاعدہ مشاورت میں مصروف عمل رہے ہیں۔