پاکستان میں ٹیکنیکل اور ووکیشنل ایجوکیشن کے شعبے میں سرمایہ کاری کے مواقع ہیں، پاک امریکہ باہمی اشتراک سے روزگار کے نئے دروازے کھولے جا سکتے ہیں، عثمان ڈار

اسلام آباد۔23اکتوبر (اے پی پی):وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائے امور نوجوانان عثمان ڈار نے کہا ہے کہ نوجوانوں کو روزگار، تعلیم اور تکنیکی تربیت کی فراہمی ترجیح ہے، کامیاب جوان قرض اسکیم اور ہنرمند پاکستان پروگرام کے اعداد و شمار تسلی بخش ہیں، پاکستان میں ٹیکنیکل اور ووکیشنل ایجوکیشن کے شعبے میں سرمایہ کاری کے مواقع موجود ہیں، پاک امریکہ باہمی اشتراک سے نوجوانوں کے لئے روزگار کے نئے دروازے کھولے جا سکتے ہیں۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے امریکی قونصلیٹ جنرل سے ملاقات کے دوران کیا۔کامیاب جوان پروگرام میں غیر ملکی اداروں اور سفیروں کی دلچسپی بڑھنے لگی ہے، ورلڈ بینک اور یورپی یونین حکام کے بعد امریکی قونصلیٹ جنرل نے وزیراعظم آفس کا دورہ کیا اور سربراہ کامیاب جوان پروگرام عثمان ڈار سے ملاقات کی۔ ملاقات کے دوران کامیاب جوان پروگرام کیلئے ”یو ایس ایڈ“ کے ذریعے ممکنہ تعاون پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

وزیر اعظم کے معاون خصوصی عثمان ڈار نے امریکی قونصلیٹ جنرل کو قرض کے تازہ اعدادوشمار پر بریفنگ دی اورپروگرام کے ذریعے نوجوانوں کو روزگار کی فراہمی کے فارمولے سے بھی آگاہ کیا۔امریکی قونصلیٹ جنرل نے کہا کہ منصوبے میں میرٹ اور شفافیت نے بہت حد تک متاثر کیا ہے، ہم منصوبے میں پاکستان کے ساتھ تعاون کے خواہشمند ہیں۔

امریکی قونصلیٹ جنرل نے کہا کہ ایسے لانگ ٹرم منصوبے 5 سے 10 سال میں معاشی اثرات ظاہر کریں گے، نوجوانوں کی حکومتی سطح پر سرپرستی قابل تعریف ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاک امریکہ مشترکہ تعاون کے نتیجے میں نوجوانوں کو مزید مواقع دیئے جا سکتے ہیں۔

عثمان ڈار نے معزز مہمان کو بتایا کہ نوجوانوں کو روزگار، تعلیم اور تکنیکی تربیت کی فراہمی ہماری اولین ترجیح ہے، کامیاب جوان قرض اسکیم اور ہنرمند پاکستان پروگرام کے اعداد و شمار تسلی بخش ہیں۔

انہوں نے کہا کہ کامیاب جوان پروگرام وزیراعظم عمران خان کی ذاتی توجہ کا مرکز ہے۔ عثمان ڈارنے کہا کہ پاکستان میں ٹیکنیکل اور ووکیشنل ایجوکیشن کے شعبے میں سرمایہ کاری کے مواقع موجود ہیں، پاک امریکہ باہمی اشتراک سے نوجوانوں کے لئے روزگار کے نئے دروازے کھولے جا سکتے ہیں۔