وزیر اعلی سندھ کی کرپشن بے نقاب کرتا ہوں اس لئے بدتمیز ہوں،حلیم عادل شیخ

کراچی۔23اکتوبر (اے پی پی):سندھ اسمبلی میں قائد حزب اختلاف حلیم عادل شیخ نے کہا ہے کہ وزیر اعلی سندھ اپوزیشن لیڈر کو بدتمیز کہتے ہیں میں انکی کرپشن بے نقاب کرتا ہوں اس لئے بدتمیز ہوں، مراد علی شاہ نے کل جو زبان استعال کی وہ ان کی اصلیت کی نمائندگی کرتی ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ اس موقع پرپی ٹی آئی کے رہنماء و رکن صوبائی اسمبلی فردوس شمیم نقوی اور دیگر موجود تھے ۔

حلیم عادل شیخ نے کہا کہ سندھ کو پیپلزپارٹی نے تباہ کردیا ہے ،اپیکس کمیٹی کے اجلاس میں فیصلہ ہوا تھاکہ کوئی شاہراہ بند نہیں کی جائے گی اورجوایسا کرے گا ان کے خلاف مقدمہ درج ہوگا ۔

انہوں نے کہا کہ آج سے پچیس روز قبل پیپلزپارٹی نے حیدرآباد کراچی مین شاہرا پر دھرنا دے کر پانچ گھنٹے سے زائد کے لئے بند کیا لیکن اس پر کوئی مقدمہ نہیں بنایاگیا ۔

قائد حزب اختلاف نے کہا کہ گزشتہ روز وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ کی سربراہی میں دائود چورنگی بند کی گئی لیکن ان کے خلاف بھی کوئی مقدمہ نہیں بنایا گیا۔ انہوں نے کہا کہ میرے خلاف شاہراہ بند کرنے پر مقدمہ بنایا گیا تھا۔

رکن صوبائی اسمبلی فردوس شمیم نقوی نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف نے گرین لائن کا وعدہ کیا تھا وہ بسیں کراچی پہنچ چکی ہیں ۔وزیر اعلی نے کراچی کی عوام کو بسیں دینے کا اعلان کیا لیکن ایک بس نہیں آئی ، آپ نے اسکولوں کو پرائیوٹ کے برابر لانے کا اعلان کیا تھا اس حوالے سے تو کچھ نہں ہوا لیکن تعلیم تباہ کر دی ۔

فردوس شمیم نقوی نے کہا کہ پیپلزپارٹی کے تیرہ سال اور ہمارے تین سال دیکھ لیں کس کی کارکردگی اچھی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پیپلزپارٹی نے زمینوں پر قبضے کئے ہم نے جنگلات بنوائیں۔