بلوچستان میں منصوبوں کی رفتار تیز کی جائے ، موٹرویز پر بزنس اور صنعتی پارک بنانے کے حوالے سے حکمت عملی وضع کی جائے ، وفاقی وزرا احسن اقبال اور مولانا اسد محمود

اسلام آباد۔14مئی (اے پی پی):وفاقی وزیر منصوبہ بندی ، ترقی و اصلاحات احسن اقبال اور وفاقی وزیر مواصلات مولانا اسد محمود کی زیر صدارت نیشنل ہائی وے اتھارٹی کے تحت منصوبوں کا جائزہ اجلاس ہفتہ کو منعقد ہوا۔ اس موقع پر وفاقی وزیر منصوبہ بندی و ترقی احسن اقبال نے کہا کہ 2017 میں پی ایس ڈی پی کے تحت این ایچ اے کے لئے 319 ارب مختص کئے گئے ، 2022 میں گھٹا کر 91 ارب کردئیے گئے ، پچھلی حکومت کی ترجیحات میں تعمیراتی منصوبے شامل نہیں تھے ۔

انہوں نے کہا کہ ٹول ٹیکس کے حوالے سے یکساں پالیسی وضع کی جائے ، زیر التواء منصوبوں پر تعمیراتی کام میں حائل رکاوٹوں کو دور کیا جائے ۔ انہوں نے کہا کہ عوام میں شاہراہوں سے متعلق قوانین کا شعور اجا گر کرنے کے لئے این ایچ اے مہم کا آغاز کرے ، بلوچستان میں منصوبوں کی رفتار تیز کی جائے ۔ انہوں نے کہا کہ موٹرویز پر بزنس اور صنعتی پارک بنانے کے حوالے سے حکمت عملی وضع کی جائے اور مقامات کی نشاندہی بھی کی جائے ۔