لیسکو کا آپریشن جاری، 402 ملزمان بجلی چوری میں ملوث پائے گئے

LESCO

لاہور۔23فروری (اے پی پی):ترجمان لیسکو نے کہا کہ چیف ایگزیکٹو لیسکو انجینئر شاہد حیدر کی زیر نگرانی انسداد بجلی چوری مہم جاری ہے۔ 24 گھنٹوں کے دوران ریجن بھر میں 402ملزمان بجلی چوری میں ملوث پائے گئے، جن میں سے149 کے خلاف مقدمات درج ہوچکے ہیں۔

پکڑے جانے والے کنکشنز میں 10 کمرشل، 2زرعی اور390 ڈومیسٹک تھے۔ تمام کنکشنز منقطع کرکے ان کو2 لاکھ 69 ہزار882 یونٹس ڈٹیکشن بل کی مد میں چارج کئے گئے ، جن کی مالیت 92لاکھ 91 ہزار624روپے ہے۔ترجمان کے مطابق بجلی چوروں کے خلاف کئے جانے والے آپریشن میں بڑے کمرشل صارفین بھی بجلی چوری میں ملوث پائے گئے۔ ان تمام کے کنکشنز بھی منقطع کئے گئے اوران کو ڈٹیکشن یونٹس چارج کئے گئے۔

شالیمار کے علاقے میں کنکشن کو6 لاکھ50ہزار روپے،شاہدرہ ٹائون کے علاقے میں کنکشن کو1لاکھ80ہزار روپے،قلعہ گجر سنگھ کے علاقے میں ملزم کو1 لاکھ60ہزار اورشاہدرہ ٹائون میں ایک ملزم کو1 لاکھ40ہزار روپے کی رقم چارج کی گئی ہے۔

انسداد بجلی چوری مہم کو164 مکمل ہوگئے ہیں، اس دوران کل 56 ہزار326 ملزمان بجلی چوری میں ملوث پائے گئے، 52 ہزار258ملزمان کے خلاف مقدمات درج کروا کر17ہزار625 ملزمان کو گرفتار کرلیا گیا۔ بجلی چوروں کو اب تک 7 کروڑ 57 لاکھ 37 ہزار361 یونٹس چارج کئے گئے ہیں جن کی مالیت 2 ارب 90 کروڑ41 لاکھ 72 ہزار721 روپے ہے۔

لیسکو چیف کا کہنا ہے کہ بجلی چوری کے مکمل خاتمے تک بلا تفریق گرینڈ آپریشن جاری رہے گا۔ آپریشن کے دوران بجلی چوروں کے ساتھ ساتھ ان کی سرپرستی کرنےوالے لیسکو افسران و ملازمین کو بھی قانون کے کٹہرے میں لایا جائے گا۔