میچ فکسنگ، مصری ٹینس کھلاڑی یوسف حسام پر تاحیات پابندی عائد

لندن ۔ 7 مئی (اے پی پی) مصر کے ٹینس کھلاڑی یوسف حسام پر میچ فکسنگ کے جرم میں ملوث پا?ے جانے پر تاحیات پابندی لگا دی گئی، یوسف حسام پر ٹینس انٹیگریٹی یونٹ (ٹی آئی یو) نے ایک سے زیادہ میچ فکسنگ اور بدعنوانی کے دیگر جرائم میں ملوث پائے جانے پر تاحیات پابندی عائد کی۔ ٹی آئی یو کے مطابق 21 سالہ یوسف حسام نے 2015 اور 2019 کے درمیان انسداد بدعنوانی کے 21 قوانین کی خلاف ورزی کی اور کھیل کے نچلے درجے پر جو?ے سے متعلق بدعنوانی کے لئے دوسروں کے ساتھ سازش کی۔گزشتہ سال مئی میں یوسف حسام کو میچ فکسنگ کے آٹھ مقدمات اور جوئے کو سہولت دینے کے چھ مقدمات میں ملوث پائے جانے پر ٹینس سے عارضی طور پر معطل کیا گیا تھا۔ ٹی آئی یو کے ایک بیان کے مطابق یوسف حسام کو اب کھیل کے گورننگ باڈیوں کے ذریعہ منعقدہ یا تسلیم شدہ کسی ٹینس ٹورنامنٹ میں حصہ لینے یا شرکت کرنے سے مستقل طور پر خارج کر دیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ یوسف حسام دسمبر 2017ء میں مردوں کے انفرادی مقابلوں کی درجہ بندی میں 291 ویں پوزیشن پر تھا اور اب تازہ ترین رینکنگ میں 820 نمبر پر ہے۔ اس سے قبل ان کے بڑے بھائی کریم حسام کو 2018ئ میں میچ فکسنگ کے متعدد جرموں کا مرتکب ہونے پر عمر بھر ٹینس کھیلنے پر پابندی عائد کردی گئی تھی۔