وزیراعلیٰ پنجاب کی زیر صدارت اجلاس، سکول ایجوکیشن ریفامز کاجائزہ

Chief Minister of Punjab
Chief Minister of Punjab

لاہور۔3اپریل (اے پی پی):وزیر اعلیٰ پنجاب مریم نواز نے پانچویں کلاس کے طلبہ کو ڈبہ بند فلیورڈ ملک دینے کے پراجیکٹ کا حتمی پلان طلب کر لیا۔ وزیراعلیٰ کی زیر صدارت سکول ایجوکیشن ریفامز کاجائزہ اجلاس منعقدہوا، جس میں نان پرفارمنگ 13 ہزار سرکاری سکولوں میں آئندہ تین ماہ میں اصلاحات لانے کا فیصلہ کیا گیا۔

مریم نوازشریف نے13 ہزار نان پرفارمنگ سکولوں میں بہتری کے لئے ایجوکیشن مینجمنٹ آرگنائزیشن سے رابطے کی ہدایت کی۔اجلاس میں سرکاری سکولوں میں غیر موجود سہولیات کی فراہمی کیلئے ڈونرز سے رابطے کااصولی فیصلہ اور ایجوکیشنل این جی اوز سے پارٹنر شپ کی تجویز پر غورکیاگیا۔صوبائی وزیر سکول ایجوکیشن رانا سکندر حیات نے کہاکہ سرکاری سکولوں میں نصابی کتب کی فراہمی کا منصوبہ تیار کرلیا گیا ہے۔

کوالٹی آف ٹیچنگ، ایویلیوایشن اور مانیٹرنگ کا میکانزم بنایا گیا ہے۔ وزیر اعلیٰ نے سکولوں میں طلبہ کی گھوسٹ انرولمنٹ پر تشویش کااظہار کیا اور کہاکہ سرکاری سکولوں میں کمپیوٹر لیب اور لائبریری لازمی ہونی چاہئے۔ سکولوں کا دورہ کر کے صورتحال کاجائزہ لوں گی۔ وزیر اعلیٰ پنجاب کو سکول ٹرانسپورٹ سسٹم پر بھی بریفنگ دی گئی۔مریم نواز شریف نے ٹیچرز ریشنل آئیزیشن کا عمل 3 ماہ میں مکمل کرنے کی ہدایت کی۔

اجلاس میں لاہور ڈسٹرکٹ میں 136 سکول نان پرفارمنگ سکولوں کے لئے پرائیویٹ سیکٹر سے پارٹنر شپ کا جائزہ لیاگیا۔سینئر صوبائی وزیر مریم اورنگزیب، صوبائی وزیر اطلاعات عظمیٰ زاہد بخاری، وزیر سکول ایجوکیشن راناسکندر حیات،پرویز رشید،ایم پی اے ثانیہ عاشق، چیف سیکرٹری اور دیگر متعلقہ حکام نے اجلاس میں شرکت کی۔