پاکستان سعودی عرب کے ساتھ اپنے دیرینہ برادرانہ تعلقات کو بڑی اہمیت دیتا ہے ،سپیکرو ڈپٹی سپیکرقومی اسمبلی

اسلام آباد۔23ستمبر (اے پی پی):سپیکر قومی اسمبلی راجہ پرویز اشرف اور ڈپٹی سپیکر زاہد اکرم درانی نے کہا ہے کہ پاکستان سعودی عرب کے ساتھ اپنے دیرینہ برادرانہ تعلقات کو بڑی اہمیت دیتا ہے ۔انہوں نے کہا کہ دونوں ممالک کے تعلقات باہمی احترام اور اعتماد پر مبنی ہیں اور دونوں برادر اسلامی ممالک نے ہمیشہ ہر علاقائی اور بین الاقوامی فورم پر ایک دوسرے کی موقف کی حمایت کی ہے، دونوں اقوام ہر مشکل وقت میں ایک دوسرے کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑے رہی ہیں ۔ انہوں نے ان خیالات کا اظہار سعودی عرب کے 92ویں قومی دن کے موقع پر اپنے علیحدہ علیحدہ پیغامات میں کیا۔

سپیکر قومی اسمبلی نے خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز ،ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان ، شوریٰ کونسل کے چیئرمین ڈاکٹر عبد اللّه کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ سعودی عرب نے ہمیشہ مشکل وقت میں پاکستان کا بھرپور ساتھ دیا ہے۔ انہوں نے تباہ کن سیلاب کے دوران متاثرین کے لئے سعودی مملکت اور عوام کی طرف سے فراہم کی جانے والی فراخدلانہ امداد پر سعودی حکومت اور عوام کا شکریہ ادا کیا۔

سپیکر نے دونوں برادر اسلامی ممالک کی پارلیمانوں کے درمیان رابطوں کو مزید فروغ دینے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ دونوں ممالک کی پارلیمانوں کے مابین رابطوں میں اضافے سے دو طرفہ تعلقات مزید مستحکم ہوں گے اور معاشی و سماجی تعاون کی نئی راہیں کھلیں گی۔

اس موقع پر ڈپٹی سپیکر زاہد اکرم درانی نے سعودی عرب کی حکومت اور عوام کو 92ویں قومی دن کے موقع پر مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان سعودی عرب کے ساتھ اپنے تعلقات پر فخر محسوس کرتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ سعودی عرب نے پاکستان کا ہر مشکل میں ساتھ دیا ہے اور دونوں ممالک مشکل کی ہر گھڑی میں ایک دوسرے کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑے رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان تجارت ، سرمایہ کاری اور دیگر سماجی و اقتصادی شعبوں میں تعاون کو مزید وسعت دینے کا خواہش مند ہے۔