پاک سعودی دوطرفہ تجارت کے حجم میں نمایاں اضافہ ، برآمدات میں 47 فیصد، درآمدات میں 37 فیصد کی نموریکارڈ

State Bank
State Bank

اسلام آباد۔21مارچ (اے پی پی):پاکستان اورسعودی عرب کے درمیان دوطرفہ تجارت کے حجم میں جاری مالی سال کے دوران نمایاں اضافہ ہواہے، مالی سال کے پہلے 8 ماہ میں سعودی عرب کو پاکستان کی برآمدات میں سالانہ بنیادوں پر47.30 فیصد جبکہ سعودی عرب سے درآمدات میں 37 فیصدکااضافہ ریکارڈکیاگیاہے۔

سٹیٹ بینک کی جانب سے اس حوالہ سے جاری کردہ اعدادوشمارکے مطابق جاری مالی سال کے پہلے 8 ماہ میں سعودی عرب کو پاکستانی برآمدات کاحجم 442.82 ملین ڈالرریکارڈکیاگیا جوگزشتہ مالی سال کی اسی مدت کے مقابلہ میں 47.30 فیصدزیادہ ہے،

گزشتہ مالی سال کی اسی مدت میں سعودی عرب کو برآمدات سے ملک کو300.61 ملین ڈالرکازرمبادلہ حاصل ہواتھا، فروری میں سعودی عرب کو پاکستانی برآمدت کاحجم 56.61 ملین ڈالرریکارڈکیاگیا جوجنوری میں 57.97 ملین ڈالراورگزشتہ سال فروری میں 43.64 ملین ڈالرتھا، مالی سال 2023 میں سعودی عرب کوبرآمدات سے ملک کو504.15 ملین ڈالرکازرمبادلہ حاصل ہواتھا۔

سٹیٹ بینک کے مطابق جاری مالی سال کے پہلے 8 ماہ میں سعودی عرب سے درآمدات میں سالانہ بنیادوں پر37.14 فیصدکی نموہوئی ، جولائی سے لیکر فروری 2024 تک کی مدت میں سعودی عرب سے درآمدات کاحجم 3.078 ارب ڈالرریکارڈکیاگیا جوگزشتہ مالی سال کی اسی مدت میں 2.244 ارب ڈالرتھا۔

فروری میں سعودی عرب سے درآمدات پر293.34 ملین ڈالرکازرمبادلہ خرچ ہواجوجنوری میں 388.81 ملین ڈالر اورگزشتہ سال فروری میں 221.48 ملین ڈالرتھا، مالی سال 2023 میں سعودی عرب سے درآمدات پر3.324 ارب ڈالرکازرمبادلہ خرچ ہواتھا۔