بھارتی فوجیوں نے 16مہینے کے محاصرے کے دوران 291کشمیری شہید کردیے

سرینگر۔5دسمبر (اے پی پی):بھارت کے غیر قانونی طورپر زیر قبضہ جموںوکشمیر میں نریندر مود ی کی فسطائی بھارتی حکومت کی طرف سے گزشتہ برس پانچ اگست کو مسلط کیے جانے والے مسلسل فوجی محاصرے کی وجہ سے کشمیریوں کی زندگیاں اجیرن بن چکی ہیں۔ مقبوضہ علاقے میں آج بھارتی فوجی محاصرے کے سولہ ماہ مکمل ہونے پر کشمیر میڈیاسروس کے شعبہ تحقیق کی طرف سے جاری کی گئی ایک رپورٹ میں انکشاف کیا گیا کہ بھارتی فوجیوں نے اس عرصے کے دوران سات خواتین سمیت 291کشمیری شہید کیے ۔ رپورٹ میں کہا گیا کہ زیادہ ترکشمیریوں کومحاصرے اور تلاشی کی نام نہاد کارروائیوں کے دوران جعلی مقابلوں میں شہید کیا گیا۔ رپورٹ میں کہا گیا کہ بیشتر نوجوانوں کو گھروں سے اٹھانے کے بعد ان پر مجاہد ہونے یا مجاہدین کے کارندے ہونے کا بے بنیاد الزام عائد کیا گیا اور بعدمیں انہیں شہید کیا گیا۔ کے ایم ایس رپورٹ میں کہا گیا کہ گزشتہ سولہ ماہ کے دوران ہونے والی 291کشمیریوں کی شہادتوں کے نتیجے میں سولہ خواتین بیوہ جبکہ 36بچے یتیم ہو گئے۔ رپورٹ میں نشاندہی کی گئی کہ اس عرصے کے دوران بھارتی فوجیوں کی طرف سے پر امن کشمیری مظاہرین کو گولیوں ، پیلٹ چھروں اور آنسو گیس کا نشانہ بنائے جانے سمیت طاقت کے وحشیانہ استعمال کے نتیجے میں 1ہزار5سو 77افراد شدید زخمی ہو گئے۔ رپورٹ میں مزید کہا گیا کہ گزشتہ سولہ ماہ میں کم از کم 14ہزار 2سو 19افراد کو گرفتار کیا گیا جن میں سے ہزاروں پر کالے قوانین لاگو کیے گئے ۔ رپورٹ میں کہا گیا کہ قابض بھارتی فوجیوں نے اس عرصے کے دوران 976مکانات اور دیگر عمارتین تباہ کیں جبکہ 94کشمیری خواتین کی بے حرمتی کی۔