سی پیک کے ثمرات سمیٹنے کا وقت آ رہا ہے، بہت سارے پراجیکٹس اسی سال مکمل ہو جائیں گے،چیئرمین سی پیک اتھارٹی عاصم سلیم باجوہ

اسلام آباد۔4مئی (اے پی پی):چیئرمین سی پیک اتھارٹی لیفٹیننٹ جنرل ،ر عاصم سلیم باجوہ نے کہا ہے کہ سی پیک کے ثمرات سمیٹنے کا وقت آ رہا ہے، بہت سارے پراجیکٹس اسی سال مکمل ہو جائیں گے۔ تمام چیزیں مثبت سمت میں جا رہی ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے نجی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے کہا کہ سی پیک کے ثمرات سمیٹنے کا وقت آ رہاہے،متعدد منصوبے 2021 میں مکمل ہوجائیں گے،ژوب کوئٹہ روڈ پر کام شروع ہوگیا ہے، سکھر حیدرآباد موٹروے منصوبے پر جلد کام شروع ہو رہا ہے، ہم سڑکوں سے آگے بڑھ کر ایگری کلچر، سائنس اینڈ ٹیکنالوجی اور سیاحت کی طرف بھی جا رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ رشکئی اقتصادی زون سے ملک میں مزید سرمایہ کاری آ ئے گی اور صنعتوں کے قیام سے روزگار کے مواقع میں اضافہ ہوگا اور ملکی برآمدات میں بھی اپنا کردار ادا کرے گا۔

عاصم سلیم باجوہ نے کہا ہے کہ رشکئی اکنامک زون بننے سے مزید عالمی سرمایہ کاری آئے گی جبکہ دھابیجی کے سلسلے میں آج سندھ کے وزیراعلیٰ سے ملاقات ہوئی۔ انہوں نے بتایا کہ ہم ایگری کلچر میں کارپوریٹ فارمنگ کی طرف جا رہے ہیں۔ چائنیز ایگری کلچر کے حوالے سے ہمیں سپورٹ کریں گے۔ عاصم سلیم باجوہ نے کہا کہ سکھر حیدر آباد موٹروے منصوبے پر جلد کام شروع ہو رہا ہے۔

پشاور سے کراچی تک موٹروے کی تعمیر مکمل ہو جائے گی۔ بلوچستان میں شاہراہوں کا جال بچھا رہے ہیں۔ سی پیک کا مغربی روٹ مکمل ہونے سے علاقائی روابط بڑھیں گے اور ترقی کا عمل تیز ہو گا۔انہوں نے کہا کہ رشکئی اور فیصل آباد میں اکنامک زونز پر کام جاری ہے۔ گوادر میں ترقیاتی منصوبوں پر تیزی سے کام جاری ہے جبکہ کراچی میں ٹریفک رش کی وجہ سے سرمایہ کار گوادر کو ترجیح دے رہے ہیں۔