ای سی سی نے درآمدی یوریا کی 50 کلوگرام تھیلا کی ڈیلرٹرانسفرپرائس 2150 روپے مقررکرنے کی منظوری دیدی

اسلام آباد۔30ستمبر (اے پی پی):کابینہ کی اقتصادی رابطہ کمیٹی نے درآمدی یوریا کی 50 کلوگرام تھیلا کی ڈیلرٹرانسفرپرائس 2150 روپے اورانسیڈینٹل اخراجات 620.47 روپے صوبوں کے ساتھ ففٹی ففٹی ساجھے داری کی بنیادپرمقررکرنے کی منظوری دیدی ہے۔

کابینہ کی اقتصادی رابطہ کمیٹی کااجلاس جمعہ کویہاں وزیرخزانہ ومحصولات اسحاق ڈارکی زیرصدارت منعقدہوا،اجلاس میں وزیرتجارت سیدنویدقمر، وزیرمملکت برائے خزانہ ومحصولات ڈاکٹرعائشہ غوث پاشا، وزیرمملکت پٹرولیم مصدق مسعودملک، وزیراعظم کے معاون خصوصی ڈاکٹرمحمدجہانزیب خان، وزیراعظم کے رابطہ کاربرائے معیشت بلال اظہرکیانی، رابطہ کاربرائے صنعت وتجارت رانااحسان افضل، گورنرسٹیٹ بینک، وفاقی سیکرٹریز اوردیگرسینئرافسران نے شرکت کی۔

وزارت صنعت وپیداوارکی سمری پرتفصیلی مباحثہ کے بعدای سی سی نے درآمدی یوریا کی 50 کلوگرام تھیلہ کی ڈیلرٹرانسفرپرائس 2150 روپے اورانسیڈینٹل اخراجات 620.47 روپے صوبوں کے ساتھ ففٹی ففٹی ساجھے داری کی بنیاد پر مقررکرنے کی منظوری دی۔پٹرولیم ڈویژن کی سمری پرای سی سی نے میسرززاویرپٹرولیم کارپوریشن پرائیوٹ لمیٹڈ کی بنوں ویسٹ بلاک میں 10 فیصدورکنگ انٹرسٹ میسرز اورئنٹ پٹرولیم کو دینے کی منظوری دی گئی۔

وزارت پٹرولیم کی ایک اورسمری پرای سی سی نے زمزمہ ڈی اینڈ پی ایل کی پیداواری لیزمیں دوپریل 2022 سے مزید 5 سالوں کی توسیع کی منظوری دی گئی۔وزارت پیٹرولئیم کی سمری پرای سی سی نے 18 ایکسپلوریشن لائسنسز کی ویلیڈیٹی کی مدت میں توسیع کی منظوری بھی دی۔ ٹیرف کومعقول بنانے کے ضمن میں پاورڈویژن کی ایک سمری پرای سی سی نے تین ماہ کیلئے کے الیکٹرک کیلئے 0.5087 روپے فی یونٹ ایڈجسٹمنٹ کی منظوری دیدی۔

وزارت تجارت کی سمری پرای سی سی نے پابندی کے بعدپاکستان پہنچنے والے کنسائنمنٹس کی مشروط ریلیز کی منظوری بھی دی۔ اجلاس میں وزارت ہاوسنگ اینڈورکس کیلئے 2000 ملین روپے کی تکنیکی ضمنی گرانٹ کی منظوری دی گئی،اجلاس میں وزارت قومی غذائی تحفظ، وزارت پٹرولیم اوروزارت انفارمیشن ٹیکنالوجی کی پیش کردہ سمریوں کوموخرکردیاگیا۔