پاک فضائیہ کے خیبر پختونخوا میں ریسکیو آپریشنز،اشیائے خوراک کی فراہمی جاری

اسلام آباد۔30اگست (اے پی پی):پاک فضائیہ نے بلوچستان، سندھ اور جنوبی پنجاب کے سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں جاری ریلیف اور بحالی کے آپریشن کے علاوہ صوبہ خیبر پختونخوا میں بھی ریسکیو آپریشنز کو وسعت دے دی۔ ترجمان پاک فضائیہ کے مطابق خیبر پختونخوا کے گاؤں خیشکی اور نوشہرہ کلاں سے 800 افراد کو ریسکیو کر کے محفوظ مقامات پر منتقل کر دیا گیا۔

مزید برآں رسالپور کے فیلڈ کیمپوں میں 1400 افراد کو رکھا گیا ہے جہاں انہیں مفت طبی علاج، کھانا اور رہائش فراہم کی جا رہی ہے۔ وادی نلتر میں پاک فضائیہ کی جانب سے مفت راشن اور طبی امدادی کیمپ بھی قائم کیے گئے ہیں۔ ایئر مارشل حامد راشد رندھاوا ڈپٹی چیف آف ا یئر سٹاف (ایڈمنسٹریشن) اور ا یئر وائس مارشل معید خان ڈائریکٹر جنرل ایئر آپریشنز نے سیلاب سے متاثرہ علاقوں کا فضائی جائزہ لیا۔

دونوں افسران نے پی اے ایف کے اہلکاروں کی طرف سے سیلاب سے بچاؤ اور بحالی کی سرگرمیوں کا معائنہ کرنے کے لیے فیلڈ کیمپس کا بھی دورہ کیا۔ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران انسانی ہمدردی کی بنیاد پر 13960 فوڈ پیکٹ اور 924 راشن پیک جن میں بنیادی اشیائے خوردونوش اور اجناس شامل تھیں،

ضرورت مند خاندانوں میں تقسیم کیے گئے۔ مزید برآں، پی اے ایف کے فیلڈ ہسپتالوں میں میڈیکل ٹیموں نے 804 مریضوں کو مفت علاج اور ادویات کی سہولیات فراہم کیں۔ پاک فضائیہ کی ایمرجنسی ریسپانس ٹیمیں سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں ریسکیو اور ریلیف کے کاموں میں بڑھ چڑھ کر حصہ لے رہی ہیں۔